ایف ایم ریڈیو

پنجاب پولیس آخر کر کیا رہی ہے، کسی کو شرم ہے نا حیا، جسٹس فائز عیسی

 اسلام آباد: جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے ایک کیس کی سماعت کے دوران ریمارکس دیے کہ کیا معلوم کل کسی کے کہنے پر پولیس مجھے ملزم بنا دے۔

سپریم کورٹ میں شوہر کے قتل کے الزام میں گرفتار خاتون کی درخواستِ ضمانت کی سماعت ہوئی تو عدالت نے پچاس ہزار روپے کے مچلکے کے عوض درخواست منظور کرتے ہوئے ملزمہ کی رہائی کا حکم دیا۔

عدالت نے پنجاب پراسیکیوشن اور پولیس پر اظہار برہمی کرتے ہوئے ریمارکس دیے کہ پولیس کا ادارہ جعلی مقدمات کے ذریعے پیسے بنانے کیلئے نہیں، تمام تفتیشی افسران کو ایک ایک ماہ جیل بھجوانا پڑے گا، تفتیشی افسران کو علم ہونا چاہیے کہ جیل کیا ہوتی ہے۔

جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے کہا کہ انصاف کیلئے سب سے پہلا فورم پولیس ہوتی ہے، صرف کسی کے کہنے پر حاملہ خاتون کو ملزم بنا دیا، کیا معلوم کل کسی کے کہنے پر پولیس مجھے ملزم بنا دے، تفتیشی افسر کو یہ بھی معلوم نہیں مقتول کے بھائی شادی شدہ ہیں یا نہیں۔

جسٹس فائز عیسی نے کہا کہ کسی کو شرم ہے نا حیا، پنجاب پولیس آخر کر کیا رہی ہے، گرفتاری کے وقت خاتون تین ماہ کی حاملہ تھی، خاتون نے جیل میں بچے کو جنم دیا، حاملہ خاتون اپنے شوہر کو بلاوجہ کیسے قتل کر سکتی ہے۔

واضح رہے کہ رفعت نورین پر 2018 میں شوہر کو قتل کرنے کا الزام ہے۔

Leave a Comment

Your email address will not be published.

You may also like

Read More

post-image
اہم خبریں
قصور: ” میرے پوت نوں مارنا نئیں”ناراض بیوہ بوڑھی ماں نے بیٹے بہو کو گلے لگا لیا بوڈھی ماں کی تھانے میں فریاد سے...
Read More
post-image
ٹیکنالوجی
ویووY15Cپاکستان میں متعارف کروا دیا گیا 16 اگست 2022 عالمی شہرت یافتہ سمارٹ فون بنانے والی کمپنی ویوو  نے پاکستان میںاپنی وائے سیریزمیں نیاY15Cمتعارف...
Read More
post-image
اہم خبریں
مگرمچھوں کے ناپید ہونے سے ہمارے ماحول پر تباہ کن اثرات ہوں گے، ماہرین سائنس دانوں نے خبردار کیا ہے کہ مگر مچھوں کی...
Read More
post-image
اہم خبریں
اے پی ایس حملے کا ماسٹرمائنڈ عمر خالد خراسانی بم دھماکے میں ساتھیوں سمیت ہلاک کالعدم تحریک طالبان پاکستان کےاہم کمانڈر عمرخالد خراسانی ساتھیوں...
Read More
post-image
اہم خبریں
کراچی: اسسٹنٹ کمشنر اسما بتول کو اسلحہ کے زور پر لوٹ لیا گیا کراچی کے علاقے بہادر آباد میں اسسٹنٹ کمشنر فیروز آباد اسما...
Read More