49

خانیوال قومی شاہراہ پرگزشتہ شب  پنوعاقل سانگھی کے قریب ٹرالر کی ٹکر مزدہ الٹ جانے کے باعث خوفناک حادثہ

خانیوال قومی شاہراہ پرگزشتہ شب  پنوعاقل سانگھی کے قریب ٹرالر کی ٹکر مزدہ الٹ جانے کے باعث خوفناک حادثہ پیش آیا۔جس میں 11 گیارہ افراد موقع پر ہی جاں بحق ہو گئے تھے جس میں خانیوال کی نواحی بستی فرید آباد کے ایک ہی بد قسمت خاندان کے 9افراد بھی موجود تھے۔مسافر وین پنجاب کے شہر خانیوال سے کراچی جا رہی تھی کہ یہ حادثہ پیش آیا.۔جانبحق ہونے والوں میں چار خواتین اور سات بچے شامل ہیں۔ جن کی لاشیں آج دوپہر تدفین کے لیے ان کے گھر پہنچائی گئیں تو ہرآنکھ اشکبار اور ماحول سوگوار تھااور خوشیوں بھرا گھر ماتم کدہ میں تبدیل ہوگیا۔ جاں بحق ہونے والو ں کی شناخت رضوان، حنان، رحمان، طاہرہ، نور، فاطمہ ارم، طوبیٰ، روبینہ،اورلائبہ سے ہوئی ہے۔جاں بحق ہونے والوں میں چھ بچے اور تین خواتین شامل ہیں۔یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ مزدہ نیچے سے اینٹوں سے بھری ہوئی تھی اور مزدہ کے اوپر مسافر تھے اوروہ اپنے چھوٹے بھائی کی شادی میں شرکت کے لیے کراچی جا رہے تھے۔مرحومین کی نماز جنازہ آبائی بستی میں ادا کردی گئی جس میں سینکڑوں افراد نے شرکت کی شرکاء کا کہنا تھا کہ ستر سالہ تاریخ میں یہ علاقہ کے لیے سب سے بڑا سانحہ ہے جس میں ایک ہی خاندان کے نو افراد جاں بحق ہوئے ہیں۔بدقسمت خاندان مقامی صحافی ممتاز حسین نمائندہ جے این این کے قریب عزیز تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں